مقبوضہ کشمیر:پلوامہ میں بھارتی فوج کی بربریت،مزید3 کشمیریوں کو شہید کر دیا

سری نگر (جرات نیوز) مقبوضہ جموں و کشمیر میں، بھارتی فوجیوں نے ضلع پلوامہ میں تین کشمیریوں کو شہید کردیا۔نوجوانوں کو فوجی دستوں نے ضلع کے علاقے ٹیکن میں کورڈن اور سرچ آپریشن کے دوران شہید کیا۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق علاقہ میں حریت پسندوں کے چھپے ہونے کی اطلاع ملنے پر سکیورٹی فورسز نے علاقہ کو محاصرے میں لیا تھا۔ انکاونٹر کے شروع ہوتے ہی موبائل انٹرنیٹ سروس بند کر دی گئی۔بھارتی پولیس نے الزام عائد کیا ہے کہ شہید ہونے والے دونوں نوجوان عسکریت پسند تھے۔جن کا تعلق البدر عسکری تنظیم سے بتایا جاتا ہے۔تصادم کا یہ واقعہ پلوامہ کے علاقہ میں سکیورٹی فورسز اور حریت پسندوں کے درمیان علی الصبح تصادم شروع ہوا۔ دوسری جانب مقبوضہ جموں و کشمیر کے شمالی ضلع بارہمولہ کے علاقے پٹن میں گرنیڈ بم حملہ ہوا جس میں کم از کم سات شہریوں کے زخمی ہوئے ہیں جنہیں قریبی ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ہسپتال انتظامیہ نے زخمی افراد کی شناخت غلام محمد پرے ولد محمد رمضان پرے، گلزار احمد خان ولد غلام محی الدین خان، منظور احمد بھٹ ولد غلام محمد بھٹ، زبیر احمد ڈار ولد عاشق ڈار کے طور پرکی ہے۔ ان سب کا تعلق سنگھ پورہ سے بتایا جاتا ہے۔ اس کے علاوہ تبسم ولد عبد الرحمان بھٹ ساکنہ دودی پورہ ہندوارہ اور فرمان علی ساکنہ اتر پردیش بھی زخمی ہوئے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق مشتبہ عسکریت پسندوں نے سکیورٹی فورسز کی طرف گرینیڈ داغا۔ تاہم وہ نشانے پر نہیں لگا اور زور دار دھماکے کے ساتھ پھٹ گیا۔علاقہ کو سکیورٹی فورسز نے حصار میں لے لیا ہے اور حملہ آوروں کی تلاش جاری ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں