پاکستان میں کورونا وائرس سے متاثرہ مریضوں کے علاج میں بڑی پیشرفت

کراچی : سندھ حکومت نے کوروناکےعلاج کے لیے پلازمہ لگانے کے تجربے کیلیے کمیٹی قائم کردی ہے، کمیٹی کورونا کے مریضوں کو پلازمہ لگانے اور افادیت کاتفصیلی جائزہ لے گی۔

تفصیلات کے مطابق کوروناوائرس سےمتاثرہ مریضوں کےعلاج میں پیشرفت سامنے آگئی ، سندھ حکومت نے کوروناکےعلاج سے متعلق پلازمہ لگانےکے تجربے کے لئے کمیٹی قائم کردی ہے۔

سندھ حکومت کی جانب سے قائم کردہ 8رکنی کمیٹی میں نجی وسرکاری شعبے کےماہرین ، وفاقی سیکریٹری انسانی حقوق رابعہ جویری آغا، ضمیر گھمروایڈووکیٹ ،ڈاکٹر طاہر شمسی،ڈاکٹر شوبھا لکشمی اور ڈاکٹرخاور عباس شامل ہیں۔

کمیٹی کوروناکےمریضوں کوپلازمہ لگانے،افادیت کاتفصیلی جائزہ لےگی ، مقامی حالات میں پلازمہ کی دستیابی،طبی وقانونی وجوہات پر رپورٹ مرتب کی جائے گی۔

خیال رہے ماہرین نےکوروناکےصحتیاب مریضوں کاپلازمہ دیگرمریضوں کولگانےکی تجویزدی ہے۔

یاد رہے ماہرامراض خون ڈاکٹرطاہرشمسی نے کہا تھا کہ کورونا وائرس کیخلاف پلازماٹرانسفیوژن کی اجازت مل گئی ہے، ڈریپ کی جانب سے آج ہمیں باقاعدہ اجازت دی گئی ہے۔

ڈاکٹر طاہر شمسی کا کہنا تھا کہ پیر سے صحتیاب مریضوں کے پلازما کی کلیکشن شروع کریں گے ، ابتدائی طور پر انتہائی تشویشناک مریضوں کیلئے پلازما استعمال کریں گے، وینٹی لیٹر پر جانے والے مریضوں کیلئے پلازما استعمال کیا جائے گا۔

ماہرامراض خون نے مزید کہا تھا کہ چین، امریکا، جرمنی ،اسپین ،اٹلی میں پلازما ٹرانسفیوژن ہورہا ہے، ہماری تیاریاں مکمل ہیں، اس وقت ملک بھرمیں پچاس سےساٹھ افراد پلازما دینے کے قابل ہیں،ایک ایک پاکستانی کی جان بچانا ہمارامشن ہے۔

واضح رہے ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی آف پاکستان نے کوروناعلاج کےلیےپلازماتھراپی کے کلینکل ٹرائل اور مقامی طورپرتیاروینٹی لیٹرز کے کلینیکل ٹرائل کی اجازت دے دی ہے۔

کیٹاگری میں : صحت

اپنا تبصرہ بھیجیں