32

پبلک سیکٹر کی 10 بڑی کمپنیوں کے منافع میں بتدریج کمی،تین سال میں 698.6 ارب روپے خالص منافع

اسلام آباد: مالی سال 2014ءسے 2016ءمیں تین سال کے دوران منافع کمانے والی 10 بڑی سرکاری کمپنیوں (پی ایس سیز) نے مجموعی طور پر 698.6 ارب روپے کا خالص منافع کمایا ہے۔ وزارت خزانہ کے ”ایس اوپیز پرفارمنس ریویو“ کے مطابق گزشتہ تین سال کے دوران پبلک سیکٹرکی 10 بڑی کمپنیوں کےمنافع میں بتدریج کمی واقع ہوئی ہے اور ان کا خالص منافع مالی سال 2014 کے دوران 321.1 ارب روپے رہا تھا جو اس سے اگلے مالی سال یعنی 2015 کے دوران 113.1 ارب روپے کی کمی سے 208 ارب روپے کی سطح تک کم ہو گیااورمزید برآں مالی سال 2016کےدوران منافع کمانےوالی10بڑی حکومتی کمپنیوں کے منافع میں 38.5 ارب روپے کی مزید کمی سے ان کا خالص نفع 169.5 ارب روپے تک کم ہو گیا۔ رپورٹ کے مطابق صرف دو سال کے قلیل عرصہ کے دوران حکومت کی سرپرستی میں کام کرنے والی 10 بڑی کمپنیوں کے خالص منافع میں 151.6 ارب روپے کی کمی ریکارڈ کی گئی ہے۔ دوسری جانب یہ کمپنیاں ایک بہت بڑی افردی قوت کےروزگارکا بھی سبب بن رہی ہیں۔ مالی سال 2014کے دوران ان 10 بڑی سرکاری کمرشل کمپنیوں کے ملازمین کی تعداد 98ہزار723 تھی جو آئندہ مالی سال 2015کے دوران 95 ہزار 890 جبکہ مالی سال 2016ءکے دوران 57 ہزار 512 رہی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں