’سیاست میں زندگی گزر گئی لیکن عورتوں کو عورتوں پر ہاتھ اٹھاتے نہیں دیکھا‘

پاکستان پیپلز پارٹی کی رکن قومی اسمبلی شگفتہ جمانی کا کہنا ہے کہ سیاست میں زندگی گزر گئی لیکن یہ حالات نہیں دیکھے کہ عورتیں عورتوں کو ماریں۔گزشتہ روز قومی اسمبلی میں پیش آنے والے واقعے کے حوالے سے اپنے بیان میں شگفتہ جمانی کا کہنا تھا کہ کل دفن ہونے والے آرڈیننس ہاؤس میں لے کر آئے تھے۔شگفتہ جمانی نے بتایا کہ ہم احتجاج کر رہے تھے اور پلے کارڈ ہاتھ میں تھے، پی ٹی آئی کی محترمہ نے میرے ہاتھ سے پلے کارڈ چھین کر پھاڑ دیا۔
انہوں نے مزید بتایا کہ میں نے کہا غزالہ بدتمیزی نہ کرو لیکن انہوں نے میری انگلی موڑ دی، یہ پلٹ کر واپس آئیں اور میرے منہ پر تھپڑ مارا۔پاکستان پیپلز پارٹی کی رکن قومی اسمبلی کا کہنا تھا کہ سیاست میں زندگی گزر گئی لیکن یہ حالات نہیں دیکھے کہ عورتیں عورتوں کو ماریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں