ٹھٹھہ میں تیز ہواؤں کے باعث کشتیاں الٹنے سے 38 ماہی گیر ڈوب گئے

کراچی: کیٹی بندر کے قریب حجامڑو کریک میں تیز ہواؤں کے باعث 3 کشتیاں الٹنے سے 38 ماہی گیر ڈوب گئے۔ ٹھٹھہ کے قریب کیٹی بندر کے کھلے سمندر میں 3 کشتیاں ڈوب گئیں جس میں موجود 38 ماہی گیر ڈوب گئے۔ ترجمان پاکستان فشر فوک فورم کے مطابق تیز ہواؤں کے باعث سمندر میں طغیانی رہی، دو کشتیاں الصدیق اور البحریہ ابراہیم حیدری کراچی سے روانہ ہوئی تھیں، ان سمیت 3 کشتیاں ڈوب گئیں، 25 ماہی گیروں کو میری ٹائم سکیورٹی ایجنسی نے ریسکیو کرلیا جب کہ 18 ماہی گیر لاپتا ہیں۔دوسری جانب ریسکیو ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈوبنے والے 4 ماہی گیروں نے لکڑی کے ٹکڑے پر تیر کر اپنی جان بچالی ہے، جب کہ 14 ماہی گیر تاحال لاپتا ہیں، جن کی تلاش کے لیے ٹیمیں روانہ کردی ہیں۔
امدادی اداروں کے مطابق پانی سے نکل کر جان بچانے والوں میں عثمان ملاح، ہارون چنہ، خمیسو ملاح اور صدیق ملاح کو کیٹی بندر اسپتال منتقل کردیا گیا ہے اور ان کی صحت کافی بہتر ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں