خاتون کو رکشے سے اغوا کرکے 3 ملزمان کی اجتماعی زیادتی

بیدیاں روڈ پر رکشے میں سوار خاتون کو 3 ملزمان نے اغوا کرکے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بناڈالا۔لاہور کے علاقے بیدیاں روڈ کی رہائشی خاتون رکشے پر سفر کر رہی تھی، کہ راستے میں 3 نامعلوم ملزمان نے خاتون کو اغوا کرلیا اور اجتماعی زیادتی کا نشانہ بناکر خاتون کو سڑک پر پھینک کر فرار ہوگئے۔ایس پی کینٹ عیسی سکھیرا کے مطابق متاثرہ خاتون نے پولیس کو اطلاع دی اور اس کی مدعیت میں تین ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔ خاتون نے اپنے بیان میں بتایا کہ وہ رکشے میں سفر کررہی تھی کہ رکشہ خراب ہو گیا، خاتون رکشے سے اتر کر سڑک کنارے کھڑی ہوگئی، کہ ایک کار پر سوار 3 ملزمان نے اکیلی خاتون دیکھ کر اغوا کر لیا، گاڑی میں موجود تین افراد نے خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا اور سڑک پر پھینک کر فرار ہوگئے۔ایس پی کینٹ نے بتایا کہ متاثرہ خاتون کی درخواست پر تھانہ ہیر میں مقدمہ درج کرکے ملزمان کی گرفتاری کے لیے خصوصی ٹیم تشکیل دے دی گئ ہے، اور جدید ٹیکنالوجی اور کیمروں کی مدد بھی حاصل کی جا رہی ہے، ملزمان کو جلد گرفتار کر کے قانون کے سامنے لائیں گے۔دوسری جانب آئی جی پنجاب راؤ سردار علی خان نے بیدیاں روڈ پر خاتون سے مبینہ اجتماعی زیادتی کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور سے واقعہ کی رپورٹ طلب کر لی ہے، اور ڈی آئی جی آپریشنز کو متاثرہ خاتون سے فوری رابطہ کرنے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ ملزمان کی شناخت کے لیے فوری ٹھوس اقدامات کیے جائیں، ملزمان کو ٹریس کرکے جلد از جلد گرفتار کیا جائے گا، درندہ صفت ملزمان رعائیت کے مستحق نہیں، سخت ترین سزا دلوائی جائے گی، اور متاثرہ خاتون کو انصاف کی فراہمی ترجیحی بنیادوں پر یقینی بنائی جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں