اسٹوئنٹس نے بولڈ ہونے کے بعد امپائر پر چلانا شروع کردیا، سزا سے بچ گئے

ممبئی: لکھنئو سپر جائنٹس کے آسٹریلوی آل راؤنڈر مارکس اسٹوئنٹس نے بولڈ ہونے پر امپائر کرس گفینی پر چلانا شروع کردیا۔رائل چیلنجرز بنگلور سے میچ کے 19 ویں اوور میں جوش ہیزل ووڈ کی پہلی گیند کو گفینی نے وائیڈ قرار نہیں دیا، ری پلیز میں واضح طور پر گیند باہر جارہی تھی، اس لیے اگلی بال پر جب اسٹوئنس بولڈ ہوئے تو انھوں نے وہیں سے امپائر پر چلانا شروع کردیا۔ان کی اس حرکت کو میچ ریفری نے آئی پی ایل کوڈ آف کنڈکٹ کے لیول ون کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے صرف سرزنش پر اکتفا کیا، آل رائونڈر نے اپنی غلطی تسلیم کرلی۔دوسری جانب لکھنئو سپر جائنٹس کے کپتان لوکیش راہول کو بھی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کا مرتکب قرار دیتے ہوئے 20 فیصد میچ فیس کا جرمانہ کردیا گیا، لیگ کی جانب سے ان کے جرم کی تفصیل نہیں بتائی گئی ، صرف یہ کہا گیا کہ لوکیش نے بھی اپنی غلطی کے ساتھ سزا بھی قبول کرلی، اس لیے معاملے کی باقاعدہ سماعت کی ضرورت محسوس نہیں ہوئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں