مالی سال 2022 ، 23 خیبرپختونخوا کے بجٹ میں سرکاری ملازمین کیلئے متوقع مراعات

مالی سال 2022 23 میں صوبائی حکومت نے سرکاری ملازمین کیلئے جو پیکج تیار کیا ہے وہ درج ذیل ہیں.
سرکاری ملازمین کی کنوینس الاؤنس میں اضافے کے ساتھ ہاؤس رینٹ بڑھانے کا فیصلہ بھی متوقع ہے، کچھ ایڈہاک ریلیف بیسک پے میں ضم کرنے کے بعد بیسک پے پر گریڈ ایک سے گریڈ سولہ تک کے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 15 فیصد آور گریڈ سترہ سے گریڈ بائیس تک کے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں دس اضافہ متوقع ہے،
صوبائی سرکاری ملازمین کی سروس سٹرکچر ختم کرکے ٹائم سکیل لانے کا فیصلہ متوقع ہے ،
60 سالہ مدت ملازمت کے دوران ہر ملازم کو تین بار ٹائم سکیل پر ترقی دی جائیگی،
مدت ملازمت کے دس سال بعد پہلا ٹائم سکیل دیا جائے،دوسری اور تیسری بار ٹائم سکیل آٹھ آٹھ سال بعد ملے گا مطلب 26 سال میں ہر ملازم کو تین بار ترقی دی جائینگی.
یاد رہے کہ ٹائم سکیل مکمل کرنے کیلئے 26 سال ملازمت اسلئے رکھا گیا ہے کہ صوبائی حکومت نے نئی سروس پالیسی کے تحت سرکاری ملازمین کی اپنی مرضی سے پینشن لینے کی حد 26 سال سروس اور 55 سال عمر کی حد رکھی ہے اسلئے اگر کوئی سرکاری ملازم 26 سال سروس پر اپنی مرضی سے پینشن لیتا ہوں تو اس کی ترقی کا سفر مجروح نہ ہو.
علاؤ ازیں متوقع بجٹ میں سروس سٹرکچر ختم کرنے کے بعد سرکاری ملازمین بلحصوص محکمہ تعلیم کے تمام کیڈر سے کوٹا سسٹم ختم ہو جائے گا.جس کے بعد کلاس فور ملازمین کلرکس آور ٹیچرز حضرات ایک کیڈر سے دوسرے کیڈر میں کوٹا سسٹم کے تحت پروموٹ نہیں ہونگے.بلکہ دوسرے کیڈر میں جانے کیلئے باقاعدہ طور پر قانونی تقاضے پورے کرنے ہونگے مثلاً ایٹا ٹیسٹ وغیرہ ،جبکہ محکمہ تعلیم کے علاؤہ وہ سرکاری ملازمین آور اہلکار جو دوسرے محکموں میں خدمات سر انجام دیتے ہیں اور رشوت آور سفارش نہ ہونے کی وجہ سے عرصہ دراز سے ایک ہی سکیل میں بیٹھے ہیں ان کیلئے ترقی کی راہیں کھول جاینگے .ریٹائرڈ سرکاری ملازمین کی پنشن میں پندرہ فیصد اضافہ متوقع ہے .

اپنا تبصرہ بھیجیں