’شمالی کوریا نے ایک اور ایٹمی تجربے کی تیاری مکمل کرلی‘

جنوبی کوریا نے دعویٰ کیا ہےکہ شمالی کوریا نے ایک اور ایٹمی تجربے کی تیاری مکمل کرلی ہے۔میڈیا رپورٹس کےمطابق جنوبی کوریا اور امریکا کے وزیر خارجہ کے درمیان پیر کے روز ملاقات ہوئی جس کے بعد جنوبی کوریا کے وزیر خارجہ پرک جن نے دعویٰ کیا کہ شمالی کوریا نے ایک اور ایٹمی تجربے کے لیے اپنی تیاری مکمل کرلی ہے اور صرف ملک کی قیادت کا سیاسی فیصلہ ہی اب اسے آگے بڑھنے سے روک سکتا ہے۔جنوبی کوریا کے وزیر خارجہ نے کہا کہ اگر شمالی کوریا یہ تجربہ کرتا ہے تو اسے اس کی قیمت چکانی ہوگی۔اس موقع پر جنوربی کوریا کے وزیر خارجہ نے خدشہ ظاہر کیا کہ آنے والے دنوں میں شمالی کوریا کی طرف سے یہ ساتواں ایٹمی تجربہ ہوگا۔انہوں نے مزید کہا کہ اگر شمالی کوریا اپنے مقاصد میں کامیاب ہوتا ہے تو اس پر عائد عالمی پابندیوں اور ہماری مزاحمت میں مزید اضافہ ہوگا لہٰذا شمالی کوریا کو اس سلسلے میں اپنی سوچ بدلتے ہوئے درست فیصلہ لینا چاہیے۔اس موقع پر امریکی وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ ہم جنوبی کوریا اور دیگر کے ساتھ چیزوں کو انتہائی قریب سے دیکھتے ہوئے معاونت کے ساتھ ہنگامی منصوبہ بندی کررہے ہیں اور ہم فوجی صلاحیتوں کو لے کر قلیل اور طویل مدتی ہم آہنگی کیلئے تیار ہیں۔دونوں وزرائے خارجہ نے شمالی کوریا کے لیے غیر مشروط طور پرمذاکرات کے دروازے کھلے رکھنے پر بھی زور دیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں