57

کراچی میں چارمنزلہ رہائشی عمارت زمین بوس ہوگئی،درجنوں افراد ملبے تلے دب گئے

کراچی(جرات نیوز) کراچی کے علاقے اللہ والا ٹاؤن میں چار منزلہ رہائشی عمارت زمین بوس ہوگئی، جس میں کچھ افراد کے دبے ہونے کا بھی خدشہ ہے۔عمارت گرنے کے بعد علاقہ مکینوں نے فوری طور پر اپنی مدد آپ کے تحت ریسکیو کارروائیاں شروع کیں تاہم بعدازاں ریسکیو ٹیموں کے رضا کار بھی جائے وقوعہ پر پہنچ گئے جس کے بعد عمارت کے ملبے تلے دبے افراد کو نکالے جانے کا عمل جاری ہے۔علاقہ مکینوں کا کہنا ہےکہ عمارت کے ملبے سے کچھ افراد کو نکال لیا گیا ہے تاہم 25 کے قریب افراد تاحال موجود ہونے کا خدشہ ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق جس مقام پر عمارت گری ہے وہاں کافی عرصے سے پانی کھڑا رہا۔ زمین بوس ہونے والی عمارت میں چھ فیملی کے رہائش پذیر ہونے کی رپورٹ ہےواقعہ کے بعد پولیس رینجرز اور ریسکیو ٹیمیں موقع پر پہنچ گئی ہیں جب کہ انتظامیہ کی جانب سے مشینری بھاری نفری طلب کرلی گئی ہے۔
ریسکیو ذرائع کاکہنا ہےکہ عمارت کے ملبے سے اب تک 8 زخمیوں اور ایک بچے کی لاش کو نکال لیا گیا ہے اور تمام افراد کو اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔انتظامیہ کا کہنا ہے کہ رہائشی عمارت گرنے کے باعث قریبی عمارت کو بھی نقصان پہنچا ہے جس کے باعث اسے بھی خالی کروا لیا گیا ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق ٹریفک پولیس کے اہل کار ذوالفقار کی فیملی بھی اسی مکان میں رہائش پذیر ہے، ذوالفقار اپنے اہل خانہ کو فون کر رہے ہیں مگر کوئی فون پر رابطے میں نہیں آ رہا۔ایس بی سی اے کے ذرائع کاکہنا ہے کہ گرنے والی عمارت کو مخدوش قرار نہیں دیا گیا تھا تاہم عمارت گرنے کی وجوہات کا تعین کیا جارہا ہے اور اس بات کا بھی جائزہ لیا جارہا ہے کہ عمارت کا نقشہ پاس کرایا گیا تھا یا نہیں۔ذرائع کا کہنا ہےکہ اللہ والا ٹاؤن میں جس مقام پرعمارت گری ہے وہاں کافی عرصے سے پانی کھڑا رہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں