Dr abdul qadeer in lHC 155

ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبد القدیر کی نقل و حرکت کی درخواست پر سماعت 11 جولائی تک ملتوی

لاہور:لاہور ہائیکورٹ، ایٹمی سائنسدان ڈاکٹر عبد القدیر نقل و حرکت پر پابندی کیخلاف درخواست پر سماعت کی۔عدالت نے 11 جولائی کو فریقین کے وکلا کو بحث کیلئے طلب کر لیا۔چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سردار محمد شمیم خان نے ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی درخواست پر چیمبر میں سماعت کی۔عدالت نے ڈاکٹر عبد القدیر خان کی کیس کی سماعت اوپن کورٹ میں کرنے کی استدعا مسترد کر دی تھی۔سرکاری وکلا کا دوران سماعت کہنا تھا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان کی زندگی کو کل بهی خطرہ تها، آج بهی خطرہ ہے،دوسری جانب درخواستگزار
ڈاکٹر عبدالقدیر کے وکلا مدثر چودھری ، مرزا حسیب اسامہ ، غلام مجتبیٰ کا کہنا تھا کہ ڈاکڑ عبدالقدیر خان قوم کے ہیرو ہیں ان کو ازاد کیا جائےاور تعلیمی اداروں کی تقریبات میں شرکت کی اجازت نہیں دی جاتی، ملاقات کیلئے انیوالے سرکاری افسران اور میڈیا سے ملنے کی اجازت نہیں دی جاتی، عدالت نے دلائل سننے کے بعد سماعت 11 جولائی تک ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں