shahbaz sharif 72

شہباز شریف نیب کے شکنجے سے آزاد

لاہور :آشیانہ ہائوسنگ سکینڈل میں احتساب عدالت نے نیب کی شہبازشریف کے مزید جسمانی ریمانڈ میں توسیع کی درخواست مستر دکر تے ہوئے انہیں جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق نیب کی جانب سے شہبازشریف کو آشیانہ ہاﺅسنگ سکینڈل مزید 15 روزہ جسمانی ریمانڈ حاصل کرنے کیلئے احتساب عدالت میں پیش کیاگیا ۔ نیب نے عدالت سے درخواست کی کہ شہبازشریف سے تفتیش جاری ہے اس لیے مزید جسمانی ریمانڈ دیا جائے لیکن عدالت نے نیب کی درخواست مسترد کرتے ہوئے جیل بھجوا دیا ہے ۔نیب کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا کہ آشیانہ ہاﺅسنگ سکینڈل میں شہبازشریف سے تفتیش کا عمل جاری ہے اور ابھی تک مکمل نہیں ہوا اس لیے مزید پندرہ روز ہ ریمانڈ دیاجائے ۔شہبازشریف کے وکیل نے اس کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ نیب نے اب تک شہبازشریف کا 64 روز کا ریمانڈ حاصل کر لیاہے جو کہ سمجھ سے بالا تر ہے اور نیب کی جانب سے جو تفتیش کی گئی ہے اس سے متعلق بھی عدالت کو آگاہ نہیں کیا گیا ہے ، نیب کی جانب سے یہ اقدام غیر قانونی ہے ۔احتساب عدالت نے نیب کی درخواست کو مسترد کرتے ہوئے مختصر فیصلہ سنایا ، جس کے مطابق شہبازشریف کو جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا ہے اور انہیں دوبارہ 13دسمبر کو عدالت میں پیش کیا جائے گا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں