حکومتی اعلانات و اقدامات کے باوجود بجلی کا بحران شدت اختیار کر گیا، ملک بھر میں بدترین لوڈ شیڈنگ

اسلام آباد: شہباز حکومت کی جانب سے اعلانات اور اقدامات کے باوجود بجلی کا بحران شدت اختیار کر گیا ہے۔
تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم شہباز شریف نے یکم مئی سے ملک بھر میں لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کا اعلان کیا تھا مگر آج بھی بدترین لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔وزارت توانائی کے ذرائع کے مطابق ملک میں بجلی کا مجموعی شارٹ فال 7000میگا واٹ ہو گیا ہے، جب کہ بجلی کی مجموعی طلب 24 ہزار میگا واٹ، اور رسد 17000 میگا واٹ ہے۔
لاہور شہر سمیت پنجاب بھر میں لوڈشیدنگ کی صورت حال بگڑ گئی ہے، شہروں اور دیہات میں 8 سے 10گھنٹے تک لوڈ شیدنگ کی جا رہی ہے، جس پر چیمبر آف کامرس میں آج اجلاس طلب کر لیا گیا ہے، جس میں اہم فیصلے کیے جانے کا امکان ہے۔ملک میں کہیں 14 تو کہیں 20 گھنٹے بجلی غائب رہتی ہے، شہریوں کا کہنا ہے کہ ہم سمجھ رہے تھے شہباز حکومت وعدے پورے کرے گی، مگر آتے ہی لوڈ شیڈنگ بڑھا دی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں