سندھ کے سیلاب زدہ علاقوں میں وبائی امراض میں تیزی سے اضافہ

سندھ کے سیلاب زدہ علاقوں میں وبائی امراض میں تیزی سے اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے، 24 گھنٹوں کے دوران 26 لاکھ 43 ہزار سے زیادہ افراد جلدی امراض، ڈائریا ، ملیریا ، ڈینگی اور دیگر بیماریوں میں مبتلا ہوئے ہیں
محکمہ صحت کے مطابق 24 گھنٹوں میں جلدی امراض کے 13ہزار 592 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جبکہ ڈائریا کے 13ہزار 407 اور ملیریا کے 1 ہزار 310 کیسز سامنے آئے ہیں۔محکمہ صحت سندھ نے مزید بتایا کہ کتے کے کاٹنے کے جولائی سے اب تک 4 کیسز رپورٹ ہوچکےہیں، صوبے کے دیگر علاقوں میں ڈینگی کے 27 کیسز کی تصدیق ہوئی ہے جبکہ دیگر بیماریوں سے متاثر 34ہزار 401 افراد میڈیکل کیمپس میں لائےگئے ہیں۔دوسری جانب ضلع بدین میں قدرتی آبی گزرگاہ پران ندی میں شگاف 23 روز گزرنے کے باوجود پُر نہیں کیا جا سکا، 150 سے زائد دیہات زیر آب آگئے، متاثرہ علاقے کے مکین 4 روز سے تھرکول شاہراہ پر احتجاج کرنے پر مجبور ہیں۔ادھر بلوچستان میں نصیرآباد کے گوٹھ سمندرخان کھوسہ میں ملیریا میں مبتلا ایک ہی خاندان کے دو بچے انتقال کرگئے، متاثرین نے سیلاب سے متاثر علاقوں میں میڈیکل کیمپ لگانے کا مطالبہ کیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں