شادی سے قبل امید سے ہوگئی تھی، دیا مرزا کا اعتراف

ممبئی (جرات نیوز)بالی وڈ اداکارہ دیا مرزا نے اعتراف کیا ہے کہ وہ شادی سے قبل امید سے ہوگئی تھیں، خاتون کا ماں بننا زندگی کا بہترین احساس ہوتا ہے اور اس عمل پر کسی کو شرمندہ نہیں ہونا چاہیے اور نہ ہی انہیں شرمندہ کیا جانا چاہیے۔تفصیلات کے مطابق رواں برس 15 فروری کو شادی کے بندھن میں بندھنے والی بولی وڈ اداکارہ دیا مرزا نے یکم اپریل کو اپنے ہاں حمل ٹھہرنے کی تصدیق کی تھی اور اب انہوں نے اعتراف کیا ہے کہ وہ شادی سے قبل حاملہ ہوگئی تھیں۔انہوں نے لکھا کہ خاتون کا ماں بننا زندگی کا بہترین احساس ہوتا ہے اور اس عمل پر کسی کو شرمندہ نہیں ہونا چاہیے اور نہ ہی انہیں شرمندہ کیا جانا چاہیے۔ دیا مرزا نے جواب میں لکھا کہ ہمیں سماج کی فرسودہ روایات کو ختم کرنے کی ضرورت ہے اور ہمیں ایسا سوال بند کرنا ہوں گے کہ کیا صحیح ہے، کیا غلط ہے۔دیا مرزا نے یکم اپریل کو انسٹاگرام پر اپنی تصویر شیئر کرتے ہوئے بتایا تھا کہ وہ امید سے ہیں، تصویر میں ان کے بے بی بمپ سے اندازہ ہو رہا تھا کہ ان کا حمل 12 سے 14 ہفتوں کا ہے۔اداکارہ کی جانب سے حمل کا اعلان کرنے کے بعد لوگوں نے حیرانگی کا اظہار کرتے ہوئے چہ مگوئیاں شروع کیں کہ شادی کے ایک ماہ بعد حمل ہوجانے کے بعد اتنا بڑا بے بی بمپ نہیں ہوتا۔بھارتی میڈیا رپورٹس میں بھی چہ مگوئیاں تھیں کہ ممکنہ طور پر اداکارہ شادی سے قبل حاملہ ہوگئی تھیں، تاہم اس اب اداکارہ نے اس بات کی تصدیق کردی۔بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق دیا مرزا نے اپنے امید سے ہونے کا اعلان کرنے کے وقت شیئر کی گئی تصویر پر ایک مداح کے سوال کے جواب میں اعتراف کیا کہ جب وہ شادی کرنے کی تیاریوں میں مصروف تھیں تب انہیں علم ہوا کہ وہ امید سے ہیں۔دیامرزا سے ایک مداح نے سوال کیا تھا کہ اگر وہ حاملہ ہو بھی گئی تھیں تو انہوں نے اس کا اعلان شادی سے پہلے کیوں نہیں کیا تھا؟ اور کیا شادی سے پہلے خواتین امید سے نہیں ہو سکتیں کیا؟جس پر اداکارہ نے ان کے سوال کو دلچسپ قرار دیا اور ان پر واضح کیا کہ انہوں نے صرف اسی وجہ سے شادی نہیں کی کہ وہ حاملہ ہوگئی تھیں۔دیامرزا نے لکھا کہ وہ ویبھو ریکھی کے ساتھ زندگی گزارنا چاہتی تھیں اور انہوں نے پہلے ہی شادی کا فیصلہ کرلیا تھا، اس لیے انہوں نے شادی کی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں